خیبر پختونخوا کے وزیر ٹرانسپورٹ اینڈ ماس ٹرانزٹ ملک شاہ محمد خان وزیر نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی ہے کہ بی آر ٹی پشاور کی نئے فیڈر روٹس پر خصوصی توجہ دیں اور اس پر جاری کام میں تیزی لاکر بروقت مکمل کیاجائیں نئے فیڈر روٹس کی کام میں سست روی اور تاخیر برداشت نہیں کرینگے عوام کو بہتر اور آسان سفری سہولیات مہیا کرنا موجودہ صوبائی حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہےصوبائی وزیر ٹرانسپورٹ نے یہ ہدایت خیبر پختونخوا اربن موبیلیٹی اتھارتی (کے پوما) کے ترقیاتی کاموں کے حوالے سے منعقدہ جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے جاری کی اجلاس میں کے پوما کے ڈائریکٹر، ڈپٹی ڈائریکٹر فنانس، ڈپٹی ڈائریکٹر پالیسی اینڈ پلاننگ اور ڈپٹی ڈائریکٹر پراجیکٹ نے شرکت کی صوبائی وزیر کو اجلاس میں نئے فیڈر روٹس چمکنی تا پبی، بورڈ تاریگی، حیات آباد، چارسدہ روڈ اور ورسک روڈ پر جاری کام کے بارے میں بریفنگ دی گئی بریفنگ میں بتایا گیا کہ مذکورہ فیڈر روٹس پر کام جاری ہے جسے مقررہ وقت میں پایہ تکمیل تک پہنچایا جائیگا صوبائی وزیر نے اتھارٹی حکام کو ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ ڈبگری گارڈن، چمکنی اور حیات آباد میں کمرشل پلازوں کو مقررہ وقت میں مکمل کئےجائیں تاکہ ان پلازوں سے موصول ہونے والے آمدن کوصوبے کےعوام کی بہتر مفاد میں استعمال کیا جاسکے انہوں نے کہا کہ نئے فیڈر روڑس کی تکمیل سے پشاور شہرکے گردونواح میں رہنے والے بھی بی آر ٹی کی سفری سہولت کے مستفید ہونگے اور کم وقت اور سستے کرایہ پر سفر کرینگے بی آر ٹی میں مسافروں کو آسان سفر کیلیے تمام سہولیات مہیا کی گئی ہے اور یہی وجہ ہے کہ بی آر ٹی کی بسوں میں لوگ لاکھوں کی تعداد میں سفر کررہے ہیں انہوں نے اتھارٹی حکام کو مذید کی کہ کے پوما کے اگلے اجلاس میں پراجیکٹ کا پراگریس پیش کریں۔