خیبرپختونخوا حکومت نے صوبائی دارلحکومت میں امن و امان کی صورتحال کو مزید بہتر بنانے کیلئے ایک اہم اقدام کے طور پر ابابیل اسکواڈ کے نام سے ایک خصوصی پٹرولنگ فورس تشکیل دی ہے جس کا مقصد موثر پولیسنگ کے ذریعے جرائم کی موثر روک تھام کو یقینی بنانا اور شہریوں کو امن و امان کا مثالی ماحول فراہم کرناہے ۔وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے منگل کے روز پولیس لائن پشاور میں منعقدہ ایک تقریب میں ابابیل اسکواڈ کا باضابطہ اجراءکیا۔ ابتدائی طور پر یہ اسکواڈ 200 موٹر سائیکلوں اور 800 تربیت یافتہ پولیس اہلکاروں پر مشتمل ہو گا جو دن رات شہر کی سڑکوں اور گلی کوچوں میں گشت کرے گا ۔ مخصوص یونیفارم میں ملبوس یہ خصوصی پٹرولنگ اسکواڈ وائرلیس کمیونیکیشن ، باڈی کیمروں ، ڈرون کیمروں اور دیگر جدید آلات سے لیس ہوگا اور یہ ہمہ وقت مرکزی کنٹرول روم کے ساتھ منسلک ہو گا ۔ ابابیل اسکواڈ کی پٹرولنگ کیلئے شہر کو جرائم کی شرح کے اعتبار سے 100 بیٹس میں تقسیم کیا گیا ہے اور ہر بیٹ میں بیک وقت دو رائڈر اسکواڈ گشت کررہے ہوں گے ۔ کچھ عرصہ بعد ابابیل اسکواڈ کی تعداد میں مزید 200 موٹر سائیکلوں اور800 پولیس اہلکاروں کا اضافہ کیا جائے گا۔
تقریب سے بحیثیت مہمان خصوصی خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے اس خصوصی اسکواڈ کی تشکیل پر پولیس کے اعلیٰ حکام کو مبارکباد دیتے ہوئے کہاکہ شہر کی بڑھتی ہوئی آبادی اور یہاں پر اسٹریٹ کرائمز کی بڑھتی ہو ئی شرح کے پیش نظر اس طرح کی ایک خصوصی فورس کی اشد ضرورت تھی، اس اسکواڈ کا قیام شہر میں اسٹریٹ کرائمز کی موثر روک تھام اور شہر میں امن و امان کی مجموعی صورتحال کو بہتر بنانے میں بہت زیادہ مددگار ثابت ہو گا اور بہت جلد اس کے مثبت اثرات سامنے آنا شروع ہوں گے ۔ اُنہوںنے کہا کہ آنے والے بلدیاتی انتخابات میں امن و امان کی صورتحال کو یقینی بنانے کیلئے اس اسکواڈ کے قیام کی ضرورت اور بھی بڑھ گئی تھی۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ اگلے مرحلے میں ابابیل اسکواڈ کو ڈویژنل ہیڈکوارٹرز اور پھر ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ز تک توسیع دی جائے گی ۔ اُنہوںنے کہاکہ آسان انصاف مراکز کے قیام اور پولیس مددگار کے اجراءکے بعد ابابیل اسکواڈ کا اجراءپولیس کے نظام میں بہتری لانے کیلئے صوبائی حکومت کا ایک اور اہم اقدام ہے ۔