وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے متعلقہ حکام کو آئل ریفائنری کرک کے قیام کے منصوبے کو عملی جامہ پہنانے کے لئے ٹھوس اقدامات اٹھانے کی ہدایت کی ہے اور کہا ہے کہ منصوبے کے قیام کے لئے جگہ کی نشاندہی اور درکار زمین کی خریداری سمیت تمام ضروری امور کو جلد حتمی شکل دی جائے اوراس سلسلے میں تمام متعلقہ محکموں اور اداروں کی ذمہ داریوں کا تعین کیا جائے، یہ صوبائی حکومت کا میگا پراجیکٹ ہے جس کے قیام کے لئے حکومت تمام وسائل فراہم کریگی۔ وہ گزشتہ روز وزیراعلیٰ ہاوس پشاور میں آئل ریفائنری کرک کے قیام کے حوالے سے ایک اہم اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔ صوبائی وزیر اکبر ایوب، وزیراعلیٰ کے پرنسپل سیکرٹری شہاب علی شاہ، سیکرٹری توانائی اور دیگر متعلقہ حکام نے اجلاس میں شرکت کی۔ اجلاس میں منصوبے پر اب تک کی پیش رفت کا جائزہ لیا گیا اور آئندہ کے لائحہ عمل پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا۔ اجلاس کو آگاہ کیا گیا کہ منصوبے کے قیام کے لئے دو مختلف سائٹس زیر غور ہیں۔ وزیراعلیٰ نے منصوبے کے لئے سائٹ کے انتخاب کے عمل کو بلا تاخیر حتمی شکل دینے اور زمین کی خریداری کے لئے ضروری اقدامات اٹھانےکی ہدایت کی تاکہ منصوبے پر جلد عملی کام کا آغاز ممکن ہو سکے۔ انہوں نے محکمہ توانائی کو دیگر متعلقہ حکام کے ساتھ اجلاس منعقد کرنے اور منصوبے پر عمل درآمد کے لئے ذمہ داریوں کا واضح تعین کرنے کی بھی ہدایت کی ہے۔ محمود خان نے کہا کہ صوبائی حکومت شروع دن سے صوبے میں سرمایہ کاری کے اضافے اور سرمایہ کاروں کو سہولیات کی فراہمی کے لئے کوشاں ہے۔ آئل ریفائنری کرک صوبائی حکومت کااہم اور میگا منصوبہ ہے جس کے قیام کے لئے حکومت تمام ترممکنہ تعاون فراہم کریگی۔