سپیکر خیبر پختونخوا اسمبلی مشتاق احمد غنی نے آج ایبٹ آباد میں ٹائیگر فورس ڈے کے موقع پر شجرکاری مہم کا آغاز کیا. اس موقع پر چیف سیکرٹری ڈاکٹر کاظم نیاز, کمشنر ہزارہ ریاض محسود, وزیر خوراک قلندر لودھی, ایم این اے علی خان جدون, ڈی سی ایبٹ آباد مغیث ثناء اللہ, محکمہ پولیس, ریسکیو, واسا, جنگلات, آبپاشی و دیگر محکمہ جات کے اعلی حکام اور عوام کی کثیر تعداد موجود تھی. اپنے خطاب میں سپیکر مشتاق غنی نے کہا کہ لاک ڈاون میں جب لوگ کرونا کے خوف سے باہر نہی نکل پا رہے تھے, تب یہ ٹائیگر فورس تھی جس نے نہ صرف گھر گھر راشن پہنچایا بلکہ ضلعی انتظامیہ اور کرونا کے مریضوں کی مدد بھی کی. انھوں نے امید ظاہر کی کہ آگے جاکر ٹائیگر فورس ملکی خدمت میں قومی اداروں کے شانہ بشانہ کھڑی ہوگی. آج شجر کاری مہم میں ٹائیگر فورس اپنا حصہ ڈالے گی اور عوامی نمائندوں و قومی اداروں کے افسران و اہلکاروں کے ساتھ مل کر شجر کاری مہم کا آغاز کرے گی. انھوں نے کہا کہ ہم نے وزیر اعظم عمران خان کے وژن کے مطابق بلین ٹری سونامی کو کامیاب بنایا اب ہمارے صوبے کو پانچ لاکھ درختوں کا ٹارگٹ ملاہے جوکہ ہمارے کمشنر ہزارہ کی محنت و محبت سے اب تک بارہ لاکھ تک پہنچ چکی ہے اور اب ہم نے تہیہ کیا یے کہ صوبے میں پانچ کی جگہ پینتیس لاکھ درخت لگاے جاینگے. ہم نے نہ صرف شجر کاری مہم کو کامیاب بنانا یء بلکہ ان درختوں کی ٹمبر مافیا اور مویشیوں سے حفاظت بھی کرنی ہے.انھوں نے آخر میں کمشنر ہزارہ ریاض محسود می تعریف کرتے ہوئے کہا کہ ہزارہ کو اب ایک قابل اور محنتی افسر ملا ہے جو اپنی انتھک محنت اور لگن سے ہزارہ ڈیویژن کی تقدیر بدل دینگے اور عوامی شکایات کا فل الفور ازالہ بھی ممکن ہوجاے گا۔