پشاور ہائیکورٹ مینگورہ بینچ بار ایسوسی ایشن کیلئے50 لاکھ روپے اور ڈسٹرکٹ بار ایسوسی ایشن سوات کیلئے 30 لاکھ روپے کی گرانٹ کا چیک ڈسٹرکٹ بار روم میں ایک سادہ مگر پروقارتقریب میں صدر افتخار احمد ایڈوکیٹ اور صدر عنایت اللہ ایڈوکیٹ کو حوالہ کر دیا اس موقع پر پی ٹی آئی سینئر رہنما شیر افگن کاکا،زاہد خان باز خان افرین خان سمیت وکلاء نے شرکت کی اس موقع پر فضل حکیم خان یوسفزئی نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وکلاء برادری نے ہمیشہ قانون کی بالادستی کیلئے کام کیا اور پاکستان تحریک انصاف نے وکلاء کے مسائل کے حل اور عوام کو فوری و سستے انصاف کی فراہمی میں وکلاء برادری کا کھل کر ساتھ دیا ہے انہوں نے کہا کہ وکلاء کی فلاح و بہبود کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے جا رہے ہیں تاکہ وکلاء کے مسائل ترجیحی بنیادوں پر حل کرکے ان کو پیشہ ورانہ امور کی احسن انجام دہی کے لئے موافق ماحول کی فراہمی یقینی بنائی جا سکے انہوں نے کہا کہ وکلاء ایک معزز پیشہ سے وابستہ ہیں اور حکومت وکلاء برادری کو قدر کی نگاہ سے دیکھتی ہے اور وزیراعلیٰ محمود خان کے احکامات پر وکلاء برادری کی فلاح و بہبود کے اقدامات کو پوری توجہ سے تکمیل کی جانب بڑھایا جا رہا ہے انہوں نے کہا کہ وکلاء کسی معاشرے میں ریڑھ کی ہڈی کی حیثیت رکھتے ہیں اور خاص کر ہمارے معاشرے میں جہاں نا انصافی کا سامنا ہو وہاں وکلاء کی اہمیت کو فراموش نہیں کیا جاسکتا انہوں نے کہا کہ ہمیں چاہئے کہ ہر انسان کی عزت اور احترام کریں تاہم کچھ لوگوں کو اہم ذمہ داریاں نبھانے کے باعث کچھ زیادہ عزت حاصل ہوتی ہے جیسے وکلاء کو رب العز ت نے بہت عزت دی ہے لہٰذا وہ وکلاء کا دل سے عزت و احترام کر تے ہیں تقریب سے صدر افتخار احمد ایڈوکیٹ،عنایت اللہ ایڈوکیٹ،سابق صدر بار ایسوسی ایشن حضرت معاذ خان ایڈوکیٹ،سرور خان ایڈوکیٹ صدر آئی ایل ایف اور دیگر نے خطاب کیا اور فضل حکیم خان کے بار کیلئے خدمات کو سراہا اور کہا کہ بار کو سہولیات کی فراہمی کے لئے بھی ان کی خدمات روز روشن کی طرح عیاں ہیں جن کی وہ دل سے قدر کرتے ہیں بعد ازاں فضل حکیم خان نے بار کے صدور کو 50لاکھ اور 30 لاکھ روپے کا چیک دیا۔