کمشنرمردان ڈویژن مطہر زیب خان نے کہا ہے کہ پولیو ایک قومی مسئلہ ہے اور ڈویژنل سطح پر اس مہم کی نگرانی خود کروں گا۔ علمائے کرام کے ذریعے انکاری والدین کو منانے کیلئے عملی اقدامات کررہے ہیں تاکہ آنیوالا پولیو مہم کامیابی سے ہمکنار ہوسکیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ڈویژنل ٹاسک فورس کمیٹی برائے پولیوکے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ڈپٹی کمشنر مردان محمد عابد خان وزیر، ڈپٹی کمشنر صوابی شاہد محمود، ایس پی اپریشن مشتاق خان، ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر مردان، صوابی، ڈویژنل ان سٹاف آفیسر ڈاکٹر اصغر خان، ڈسٹرکٹ ان سٹاف آفیسر ڈاکٹر ذیشان اور دیگر محکموں کے افسران موجود تھے۔ ڈویژنل ان سٹاف آفیسر ڈاکٹر اصغر خان نے حکام کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ آنیوالا پولیو مہم 17 سے 21 فروری جاری رہیگا، جس کے دوران مردان ڈویژن میں 5 سال سے کم عمر کے 685726 بچوں کو پولیو ویکسین دی جائیگی۔ اس سلسلے میں ڈویژنل سطح پر 2294 ٹیمیں تشکیل دیدی گئی ہیں، اسی طرح ان ٹیموں کی سیکورٹی کے لئے 5672 پولیس اہلکار تعینات کئے گئے ہیں، کمشنر مردان نے ڈپٹی کمشنر مردان و صوابی اور متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ کوئی بھی سرکاری ملازم انکاری والدین کی فہرست میں شامل ہو تو ان کے خلاف قانونی کاروائی کیجائے۔ انہوں نے کہا کہ تمام تر چیلنجزاور مشکلات کے باوجود ہم اس مہم کی کامیابی کیلئے پر عزم ہے۔ کمشنر مردان نے کہا کہ پولیو مرض کے خاتمے تک ہم اس کا مقابلہ کریں گے تاکہ ہمارا مستقبل معذوری سے بچ سکیں۔