خیبر پختوخوا کے سینئر وزیر برائے سیاحت،ثقافت،آرکیالوجی، کھیل اور امور نوجوانان عاطف خان نے کہا ہے کہ قبائلی اضلاع میں سیاحت اور کھیل کے فروغ کے لئے حکومت نے خطیر رقم مختص کی ہے۔ ان اضلاع میں سیاحت کے فروغ پر ساڑھے نو ارب جبکہ کھیلوں کے فروغ پر ساڑھے 8 ارب روپے خرچ کئے جائینگے۔ قبائلی اضلاع میں کھیلوں اور سیاحت کے ترقیاتی سکیموں کی منظوری دی جا چکی ہے جس پر جلد کام شروع کیا جائیگا۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے قبائلی اضلاع میں سیاحت اور کھیلوں کے فروغ کے حوالے سے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر سیکرٹری اور ڈی جی سپورٹس بھی موجود تھے۔اجلاس کے دوران سینئر وزیر کو قبائلی اضلاع میں مختلف سکیموں پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔ سینئر وزیر نے کہا کہ قبائلی اضلاع اب خیبر پختوخوا کا حصہ ہے اور یہ علاقے کافی عرصے سے پسماندہ رہ چکے ہیں لیکن اب انکی پسماندگی دور کی جائیگی۔ قبائلی اضلاع کے عوام کو صوبے کے دیگر صوبوں کے برابر لانے کے لئے ہنگامی بنیادوں پر اقدامات کی جارہی ہے۔ ان اضلاع میں ثقافت کی ترویج اور نوجوانوں کو اپنے پیروں پر کھڑا کرنے کے لئے بھی مختلف سکیموں کی جلد منظوری دی جائیگی۔ قبائلی اضلاع میں نوجوانوں کو روزگار کے مواقع فراہم کرنے کے لئے 3 بلین روپے کی خطیر رقم مختص کی گئی۔ سینئر وزیر نے محکمہ سیاحت اور کھیل کے حکام کو ہدایت جاری کی کہ قبائلی اضلاع کے لئے منظور کئے گئے تمام ترقیاتی سکیموں پر جلد ازجلد کام شروع کیا جائے تاکہ ان علاقوں کے عوام جلد اس کے ثمرات سے مستفید ہوسکیں۔