ڈائریکٹر جنرل ایکسائز ٹیکسیشن اینڈ نارکوٹکس کنٹرول خیبرپختونخوا محمود اسلم وزیر نے محکمہ ایکسائز کے تمام  متعلقہ ریجنل ڈائریکٹرز اور ایکسائز ٹیکسیشن آفیسرز کو محاصل ریکوری میں واضح بہتری کے لیے 15 دن کا ٹائم لائن دے دیا ہے۔ انہوں نے محکمہ ایکسائز سے متعلق مقررہ محاصل ہدف کو یقینی بنانے کے لئے سخت ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام ریجنل ڈائریکٹرز اور ضلعی ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسرز محاصل ریکوری اور کارکردگی مزید بہتر بنانے پر فوری طور پر توجہ مرکوز کریں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعرات کے روز ایکسائز ڈائریکٹوریٹ میں محاصل ریکوری اورکارکردگی بارے اعلیٰ سطحی جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا ہے۔ اجلاس میں ڈائریکٹر ریونیو  سیدالامین، ڈائریکٹر رجسٹریشن صفیان حقانی ، ڈائریکٹر پشاور ریجن جاوید خیلجی، ڈاکٹر عید بادشاہ ڈائریکٹر ملاکنڈ ریجن، حیات وزیر ڈائریکٹر ساؤتھ ریجن، محمد نعمان ڈپٹی ڈائریکٹر آڈٹ اینڈ اکائونٹس اور تمام ضلعی ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسرز نے شرکت کی ہے۔ اجلاس کو اب تک کی محاصل ریکوری اور اب تک کی کارکردگی پر تفصیلی بریفننگ دی گئی جبکہ پکڑی گئی غیر قانونی گاڑیوں اور انکے قانونی عمل پر بھی تفصیلی بریفنگ دی گئ ہے۔ اجلاس میں مالی سال 22-2021 کی  8 ماہ کی جولائی سے فروری تک کی محاصل ریکوری اور کارکردگی کا تفصیلی جائزہ لیا گیا۔ اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ آئندہ کے لئے ریجنل ڈائریکٹرز اور ضلعی ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن آفیسر کی پراگریس اور کارکردگی رپورٹ کا تفصیلی جائزہ لیا جائے گا جبکہ سفارشات حکام بالا کو پیش کرنے اور اہم عہدوں پر میرٹ کے مطابق قابل اور اہل افسران کو تعینات کیا جائے گا۔ ڈائریکٹر جنرل ایکسائز نے منشیات کے خلاف انٹیلیجنس بیس کاروائیوں کا دائرہ کار بڑھانے اور خصوصی طور پر تعلیمی اداروں کو منشیات کی لعنت سے پاک کرنے پر زور دیتے ہوئے کہا ہے کہ منشیات سے پاک صاف خیبرپختونخوا ہمارا عزم ہے۔ انہوں نےٹیکس دھندگان ، گاڑی مالکان اور عوام  کو محکمہ ایکسائز سے متعلق ہر قسم اور فوری سہولیات فراہم کرنے کی بھی ہدایات کی ہے۔ انہوں نے کارکردگی اور استعداد کار بڑھانے کیلئے محکمہ ایکسائز میں جاری ریفارمز پر کام تیز کرنے،  ٹیکس دھندگان پر اضافی بوجھ ڈالنے کے بجائے ،ٹیکس نیٹ میں  نئے ریٹنگ ایریاء شامل کرنے، ٹیکس نیٹ کا دائرہ کار بڑھانے کی بھی ہدایت کی ہے ۔ اجلاس میں محمود اسلم وزیر نے محکمہ ایکسائز سے متعلق پاکستان سیٹیزن پورٹل پر موصول ہونے والی شکایات کو بروقت نمٹانے جبکہ محکمہ ایکسائز سے متعلق عدالتی مقدمات کی بروقت تیاری اور پیروی کرنے کی ہدایت بھی جاری کی ہے۔