نوجوان آگے بڑھ کر سائنس و ٹیکنالوجی کے فروغ اور ترقی کے لئے اپنی تمام تر توانائیاں صرف کریں تاکہ صوبے میں اقتصادی اور صنعتی ترقی کا نیا باب شروع کیا جاسکے ان خیالات کا اظہار وزیرِِاعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے صنعت و تجارت و فوکل پرسن برائے سرمایہ کاری عبدالکریم نے آج یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی پشاور کے شعبہ میکاٹرانکس میں منعقدہ آل پاکستان روبوٹ مقابلہ کی اختتامی تقریب کی صدارت کے موقع پر خطاب کرتے ہوئے کیا،یاد رہے کہ میکاٹرانکس ڈیپارٹمنٹ کے زیرِ اہتمام پاکستان بھر کے سکولوں کالجوں اور یونیورسٹیوں کی تین سو سے زائد ٹیموں کے مابین سہ روزہ سائنس اور روبوٹک کے مقابلے ہوئے،انہوں نے منتظمین کو کامیاب روبوٹک مقابلے منعقد کرنے پر شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا اور مدرسہ بیت السلام تلہ گنگ کے طلباء کی روبوٹک مقابلہ میں بہترین کارگردگی پر ان کو شاندار الفاظ میں خراج تحسین پیش کیا، انہوں نے مزید کہاکہ صوبائی حکومت کی انتھک محنت کی بدولت ملک میں CPEC کا پہلا صنعتی زون آپ کے صوبے میں رشکئی نوشہرہ میں بن رہا ہے،اسطرح صوبے کے کئی سیکٹر میں سرمایہ کاری کے وسیع مواقع موجود ہیں نوجوان آگے بڑھ کر ان وسائل سے فائدہ اٹھائیں اور سب سے بڑھ کر خیبر پختونخوا کی جغرافیائی اہمیت کو مدنظر رکھتے ہوئے آنے والے وقتوں کے چیلنجوں کا مقابلہ کیا جائے۔ معاون خصوصی نے طلباء اور منتظمین کا شکریہ ادا کیا اور زور دیا کہ اس طرح کے سائنسی مقابلے بار بار صوبے میں منعقد کئے جائیں تاکہ صوبے میں سائنس اور ٹیکنالوجی کے میدان میں ترقی ممکن بنائی جائے اور ساتھ یہ ہدایت کی نوجوان آگے بڑھ کر صوبائی حکومت کے بلا سود قرضوں سے فائدہ اٹھاکر اپنی تحقیق کو مزید وسعت دے کر صوبے کی ترقی میں اپنا کردار ادا کر یں اور اپنی تحقیق اور آئیڈیا کو صنعتی ماڈل میں بدلنے کی کوشش کریں۔