ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر مردان  نے گورنمنٹ پرائمری سکول نمبر 2 کے بچوں کو میبینڈازول کی ایک خوراک دیکر پانچ روزہ مہم کا باقائدہ افتتاح کیا جسمیں ڈی ایچ او، ڈسٹرکٹ کوارڈینیٹر ڈی وارمنگ انی سی ایٹیو سمیت محکمہ صحت و دیگر محکموں کے افسران نے شرکت کی۔
تفصیلات کے مطابق محکمہ صحت کی جانب سے ڈی وارمنگ انی شی ایٹیو کے تحت خیبر پختونخواہ میں سکول جانے والے پہلی جماعت سے لیکر دسویں جماعت تک کے بچوں کو پیٹ کے کیڑوں سے تحفظ فراہم کرنے کیلئے صوبہ کے 22 اضلاع میں 5 روزہ مہم کا آغاز 18 اکتوبر سے ہوگا جس میں سکول جانے والے بچوں کو میبینڈازول  کی ایک خوراک دی جائے گی تاہم سکول نہ جانے والے پانچ سال سے چودہ سال کے بچوں کی حوصلہ افزائی کی جائے گی کے وہ قریبی سرکاری یا نجی سکول یا مدرسے میں جا کر تربیت یافتہ اساتذہ سے پیٹ کے کیڑوں کے علاج کیلئے ایک خوراک لیں۔
اس موقع ڈسٹرکٹ کوارڈینیٹر ڈی وارمنگ انی شی ایٹیو امجد خان نے کہا کہ ضلع بھر کے سکولوں میں مہم کے حوالے سے اساتذہ کو ٹرینگز دی جا چکی ہیں ۔ انہوں نے مزید کہا کہ پیٹ کے کیڑوں سے پیدا ہونے والی یہ بیماریاں پاکستانی بچوں کی طویل المدتی صحت، تعلیم اور پیدواری صالحیت کیلئے شدید خطرہ ہے۔
ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر مردان نیک محمد خان نے کہا کہ والدین سے درخواست کی کہ وہ اپنے پانچ سال سے چودہ سال کے بچوں کو مقررہ تاریخوں میں قریبی سرکاری یا نجی سکول بھیجیں، اپنے بچوں کو پیٹ کے کیڑوں اوردیگر بیماریوں سے محفوظ رکھنے کیلئے میبینڈازول کی ایک خوراک ضرور دیں۔