وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا کے معاون خصوصی برائے پبلک ہیلتھ انجنیرنگ ریاض خان کی زیر صدارت قبائلی ضلع خیبر کے علاقے شلمان اور لنڈیکوتل کی مجوزہ واٹر سپلائی سکیم کی تعمیر کی فزیبیلٹی رپورٹ بارے اجلاس کا انعقاد پشاور میں کیا گیا اجلاس میں معاون خصوصی کو منصوبے کے متعلق تفصیلی بریفننگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ مذکورہ منصوبہ دریائے کابل پر تعمیر کیا جائے گا جس سے ضلع خیبر کے علاقے لنڈی کوتل،لوئے شلمان اور کم شلمان کے عوام کو 30 سال تک پانی کی فراہمی کو ممکن بنایا جا سکے گا اور انکے پینے کی صاف پانی کی فراہمی کا دیرینہ مطالبہ پورہ ہو جائے گا۔ معاون خصوصی نے اجلاس کو بتایا کہ قبائلی اضلاع کے عوام کی ترقی اور انکو کو بنیادی سہولیات کی فراہمی وفاقی اور صوبائی حکومتوں کی ترجیحات میں شامل ہے۔ انکا مزید کہنا تھا کہ وزیراعظم عمران خان اور وزیر اعلیٰ محمود خان قبائلی اضلاع کی ترقی خود مانیٹر کر رہے ہیں۔ دریں اثنا ریاض خان نے متعلقہ حکام کو ھدایات جاری کرتے ہوئے کہا کہ بلاتطل اس منصوبے پر پیپر ورک کو ختمی شکل دی جائے اور جتنا جلدی ممکن ہو سکے اس منصوبے پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے اجلاس میں سیکرٹری پبلک ہیلتھ بحرہ مند خان چیف انجنیر عبدالطیف سپرنٹینڈنگ انجنیر قیصر زمان، ودیگر متعلقہ افسران نے شرکت کی۔