ڈیرہ اسماعیل خان میں گومل زام ڈیم کمانڈ ایریا پراجیکٹ کے تحت زمینداروں میں مختلف زرعی آلات کے علاوہ دیگر ضروری سامان تقسیم کیا۔حکومت خیبر پختونخوا اور یو ایس ایڈ کے تعاون سے گومل زام ڈیم کمانڈ ایریا ڈیویلپمنٹ پراجیکٹ ڈیرہ اسماعیل خان کے تحت حالیہ عالمی کورونا وباء سے متاثر ہونے والے زمینداروں کے لئے فوری طور پر امدادی سامان فراہم کیا گیا ہے جس میں زمینداروں اور مویشی پال حضرات کے لئے زرعی آلات سمیت مویشیوں، بھیڑ بکریوں کے جوڑے، مختلف فصلوں کے بیج، کھادیں، زرعی ادویات شامل تھیں۔اس سلسلے میں محکمہ امور حیوانات (توسیع)خیبر پختونخوا کے تعاون سے ڈیرہ اسماعیل خان میں ایک تقریب منعقد ہوئی جس میں صوبائی وزیر زراعت و لائیو سٹاک محب اللہ خان بطور مہمان خصوصی شریک ہوئے جبکہ اراکین صوبائی اسمبلی سردار فیصل امین خان گنڈا پور اور سردار آغاز اکرام خان گنڈا پور، سیکرٹری زراعت ڈاکٹر محمد اسرار خان، ڈائریکٹر جنرل لائیو سٹاک (توسیع) ڈاکٹر عالم زیب مہمند، ڈاکٹر جنرل فشریز ڈاکٹر خسرو کلیم، ڈائریکٹر جنرل زراعت (توسیع) عابد کمال، ڈائریکٹر جنرل زراعت (ریسرچ) ڈاکٹر عبدالرؤف، پراجیکٹ ڈائریکٹر گومل زام ڈیم کمانڈ ایریا ڈیویلپمنٹ انجینئر محمد زبیر اور دیگر اعلیٰ حکام بھی موجود تھے۔تقریب سے ممبران صوبائی اسمبلی سردار فیصل امین گنڈاپور اور سردار آغاز اکرام خان گنڈاپور نے بھی خطاب کیا جبکہ پراجیکٹ ڈائریکٹر زانجینئر محمد زبیر خان نے صوبائی وزیر کو پراجیکٹ کی موجودہ صورت حال اور کامیابیوں سے متعلق آگاہ کیا۔محب اللہ خان نے کہا کہ سرسبز پاکستان عمران خان کا ویژن اور خواب ہے اور ہماری اولین ترجیح بھی یہی ہے کہ عمران خان کے ویژن کو عملی جامہ پہنائیں۔ محب اللہ خان نے کہا کہ گزشتہ حکومتوں نے 70سالوں میں زراعت و لائیوسٹاک پرصرف 44ارب روپے خرچ کئے ہیں جبکہ موجودہ حکومت اپنے پانچ سالہ دور میں 95ارب روپے خرچ کرے گی۔