خیبرپختونخوا ایکسائز ٹیکسیشن اینڈ نارکوٹکس کنٹرول ڈیپارٹمنٹ کی پولیس نے بدھ کو مختلف کاروائیوں کے دوران لاکھوں مالیت کی آٹھ کلو گرام آئس، پانچ کلوگرام ہیروئن، ایک لاکھ دس ہزار جعلی کرنسی و اسلحہ سمگل کرنے کی کوشش ناکام بناتے ہوئے چھ ملزمان کو گرفتار کرکے متعلقہ پولیس سٹیشنز میں مقدمات درج کردئے ہیں۔ معاون خصوصی برائے ایکسائز غزن جمال نے انسداد منشیات کی چٹخ کاروائیوں پر سیکرٹری و ڈی جی ایکسائز کے ٹیموں کی تعریف کرتے ہوئے اسے خدمت خلق قرار دیا ہے۔ ان کا مزید کہنا تھا کہ معاشرے سے منشیات کا خاتمہ ہم سب کی ذمہ داری ہے جس کے محکمہ دن رات محو ڈیوٹی رہتا ہے۔

ڈائریکٹر نارکوٹکس عسکر خان نے کاروائیوں کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ کوہاٹ روڈ پر زنگلی چیک پوسٹ پر ناکہ بندی کے دوران دو مختلف گاڑیوں سے غیر قانونی اسلحہ اور ایک لاکھ دس ہزار کی جعلی کرنسی برآمد کرلی گئی۔ غیرقانونی اسلحہ میں 12 بور، 44 بور پستول، رائفل کلاشنکوف اور دس ہزار کارتوس شامل ہیں۔ دو ملزمان کیخلاف تھانہ بڈھ بیر جبکہ ایک ملزم کیخلاف تھانہ پہاڑی پورہ میں مقدمہ درج

 دوسری جانب ایکسائز اینٹلجنس نے پشاور میں کاروائی کے دوران لاکھوں مالیت کی آئس برآمد کرلی۔ ایکسائز اینٹلجنس چیف نوید جمال۔ کے مطابق زکوڑی پل کے ساتھ ناکہ بندی کے دوران گاڑی کے خفیہ خانوں سے آٹھ کلو گرام آئس برآمد کرلی گئی جو کہ اب تک کی گئی سب سے بڑی کاروائی ہے۔ ان کے مطابق آٹھ کلوگرام آئس کی برآمدگی منشیات سمگلرز کیخلاف ایکسائز کی سب سے بڑی کامیابی ہے۔ان کا مزید کہنا تھا کہ آئس کو سی این جی ٹینک میں چھپاکر سمگل کرنے کی کوشش کی جارہی تھی۔