وزیراعلیٰ خیبرپختونخوا محمود خان نے شمالی وزیرستان کی تحصیل شیوہ میں نادرا سنٹر کے قیام کیلئے بلڈنگ کی فراہمی یقینی بنانے کی ہدایت کی ہے جبکہ تحصیل شوال میں کُبل خیل قوم کے آئی ڈی پیز کی رجسٹریشن کا مسئلہ جلد حل کرنے کی یقین دہانی کرائی ہے۔ اُنہوںنے کہا ہے کہ تحصیل شیوہ میں سکولز، بی ایچ اوز اور دیگر سہولیات کی فراہمی کیلئے ترجیحی بنیادوں پر اقدامات اُٹھائے جائیں گے ۔ اُنہوں نے یقین دہانی کرائی ہے کہ شمالی وزیرستان بشمول تحصیل شیوہ کی محرومیوں کو دور کیا جائے گاجبکہ تمام دیرینہ مسائل قوم کی مشاورت اور توقعات کے مطابق حل کئے جائیں گے ۔ اُنہوںنے عندیہ دیا ہے کہ ٹل میرعلی روڈ پر تعمیراتی کام جلد شروع کیا جائے گا۔ وہ وزیراعلیٰ ہاﺅس پشاور میں وزیراعلیٰ کے مشیر برائے ضم شدہ اضلاع اجمل وزیر، صوبائی کابینہ میں نئے شامل شدہ صوبائی وزیر برائے ریلیف اینڈ ری ہبلٹیشن اقبال وزیر کی سربراہی میں شمالی وزیرستان کی تحصیل شیوہ سے آئے ہوئے ایک جرگے سے خطاب کررہے تھے ۔ جرگے کی قیادت تحصیل شیوہ کے روحانی پیشوا فقیر شیوہ کر رہے تھے ۔ جرگے کے رہنما نے اقبال وزیر کو کابینہ میں شامل کرنے پر وزیراعلیٰ کا شکریہ ادا کیا اور توقع کی کہ تحریک انصاف کی حکومت تحصیل شیوہ کے تمام دیرینہ مسائل کے حل کیلئے ممکن اقدامات اُٹھائے گی ۔ وزیراعلیٰ نے کہاکہ قبائلی اضلاع خصوصاً شمالی وزیرستان کے72 سالہ محرومیوں کا احساس ہے ، میں خود بھی جنگ زدہ علاقے سے ہوں اور آپ لوگوں کے دُکھ درد سے بخوبی واقف ہوں۔ ترقیاتی کاموں میں عوام اور منتخب نمائندوں کی رائے کو مقدم رکھا جائے گا۔