خیبر پختونخوا اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے محکمہ ماحولیات کا اجلاس رکن صوبائی اسمبلی فضلِ الٰہی کی زیرصدارت منگل کے روز اسمبلی سیکرٹریٹ پشاور میں منعقد ہوا۔اجلاس کمیٹی کے ممبران ورکن صوبائی اسمبلی شرافت علی،انور حیات خان، صوبیہ شاہد،ساجدہ حنیف اور احتشام جاوید کے علاؤہ میاں نثار گل نے بھی شرکت کی۔ میٹنگ میں سپیشل سیکرٹری ماحولیات ظریف اللہ،ڈی جی انوائرمنٹ پروٹیکشن ایجنسی ڈاکٹر محمد بشیر خان سمیت اسلامک ریلیف اینڈ ڈیویلپمنٹ آرگنائزیشن کے نمائندوں نے شرکت کی۔ اجلاس میں رکن اسمبلی کے توجہ دلاؤ نوٹس پر بحث کی گئی اس ضمن میں میاں نثار گل نے قائمہ کمیٹی کو بتایا کہ کرک،کوہاٹ اور ہنگو میں OGDCL اور MOL تیل نکالنے کے لیے ڈرلنگ کر رہی ہیں جبکہ ڈرلنگ کے دوران جو زہریلا مواد نکالتا ہے اْس کو صحیح طریقہ سے ٹھکانے نہیں لگایا جاتا ہیجس کی وجہ سے ملحقہ علاقوں کے لوگوں کو شدید مشکلات کا سامنا ہے۔انہوں نے مزید کہا کہنالوں میں بھی آلودہ پانی شامل ہو رہا ہے جس کی وجہ سے بڑی تعداد میں مویشی بھی ہلاک ہوئے ہیں۔ چیرمین قائمہ کمیٹی فضلِ الٰہی نے متعلقہ حکام کو ہدایت کی کہ اگلی آیند اجلاس میں تینوں اضلاع کے ایم پی ایز،ڈپٹی کمشنرز سمیت MOL اور OGDCL کے نمائندے اپنی شرکت یقینی بنائیں۔ اجلاس میں اسلامک ریلیف کے نمائندوں نے قائمہ کمیٹی کو اپنے ادارے کی کارکردگی اور ماحولیاتی تبدیلیوں کے اثرات کے حوالے سے بھی تفصیلی بریفنگ دی۔ اجلاس کے اختتام پرچیرمین قائمہ کمیٹی نے قائمہ کمیٹی برائے ماحولیات کا اجلاس مہینے میں دو بار منعقد کرنے کی ہدایت کی۔