خیبرپختونخوا کے وزیرمعدنیات ڈاکٹر امجد علی کی زیر صدارت جمعرات کے روز پشاور میں ایک اہم اجلاس منعقد ہوا جس میں خیبرپختونخوا منرل گورننس ایکٹ 2017 کے ڈرافٹ ترمیمی بل کے بارے میں غور و خوص کیا۔ اجلاس میں صوبائی وزیرقانون سلطان محمد خان،صوبائی وزیر برائے مواصلات و تعمیرات اکبر ایوب خان، وزیراعلی کے مشیر برائے توانائی حمایت اللہ خان،سیکٹری منرل ڈیپارٹمنٹ سید نظر حسین شاہ اور دیگر حکام نے بھی شرکت کی صوبائی کابینہ نے 14 جون 2019 کو متفقہ اجلاس میں منرل گورننس ایکٹ ترمیمی بل 2019 پر مزید غور وخوض کے لیے ایک کمیٹی تشکیل دی تھی اس کمیٹی نے اپنے اجلاسوں میں مجوزہ ترامیم کو آخری شکل دے دی اور صوبائی کابینہ کے اجلاس میں پیش کرنے کی منظوری دے دی جس کو اگلے صوبائی کابینہ کے اجلاس میں پیش کیا جائے گا جہاں سے منظور ہونے کے بعد صوبائی اسمبلی میں قانون سازی کے لیے پیش کردیا جائے گا مجوزہ بل کی منظوری کے بعد صوب خیبرپختونخوا میں نئے منرل ٹائٹل گراؤنڈز کا اجراء شروع ہو جائے گا جس سے سرمایہ کاری کیلئے سازگار ماحول دستیاب ہو گا اور ملازمتوں کے نئے مواقع بھی پیدا ہوں گے۔